2,518

امیرِ شہر کے کُتّے


غریب شہر ترستا ہے اک نوالے کو
امیرِ شہر کے کُتے بھی راج کرتے ہیں

غریب کے بچے پیٹ کی بھوک مٹانے کے لیئے ایک روکھے سوکھے نوالے کو ترستے ہیں جبکہ دوسری طرف امیرِ شہر کے کتّوں کو ہر قسم کی آسائشیں فراہم کی جاتی ہیں. ہم بے حس ہو چکے، اللہ ہمارے حال پر رحم فرمائے. عزیزو اپنے گرد و نواح‌میں ایسے لوگوں کا خیال رکھیں اور جہاں تک ممکن ہو ان کی مدد کریں.

امیرِ شہر کے کُتّے

روٹی امیر شہر کے کتوں نے خرید لی
فاقہ غریب شہر کے بچوں میں بٹ گیا

جس کے پاس قوت خرید ہے وہ خرید لیتا ہے، دوسرے دیکھتے رہ جاتے ہیں۔ یہاں تو جس کو جتنا موقع میسر آتا ہے وہ اتنا ہی بڑا نقب لگانے کی کوشش کرتا ہے، ابھی پٹرول بحران کے دوران کیا اس قوم کا اصل چہرہ سامنے نہیں آیا کہ ایک طبقہ اپنی ٹنکیاں فل کروانے میں مصروف تھا، ایک طبقہ گیلن میں پٹرول بھر بھر کر بلیک میں بیچ رہا تھا اور ایک طبقہ اپنی ضرورت کیلئے بھی مجبور و بے کس دکھائی دیتا تھا۔

Ghareeb e Shehar Tarasta Hai Ik Nawalay Ko
Ameer e Shehar Kay Kuttay Bhi Raaj Kertay Hein


اس پوسٹ پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں