5,189

فقیری راس آتی جا رہی ہے


مجھے مجھ سے ملاتی جا رہی ہے
فقیری راس آتی جا رہی ہے

یہ مٹی میرے خال و خد چرا کر
ترا چہرہ بناتی جا رہی ہے

یہ کس کی یاد ہے جو میرے دل میں
مصلے سے بچھاتی جا رہی ہے

عجب شے ہے سخن کی سر بلندی
مرے سر کو جھکاتی جا رہی ہے

جو مستی رقص میں رکھتی تھی مجھ کو
وہ سجدوں میں رلاتی جا رہی ہے

لہو بہنے لگا ہے ایڑیوں تک
عبادت رنگ لاتی جا رہی ہے

عارف امام

فقیری راس آتی جا رہی ہے

Mujhay Mujh Say Milati Ja Rahi Hai
Faqeeri Raas Aati Ja Rahi Hai


اس پوسٹ پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں