6,887

انسان سجدے میں جا گرتا ہے

کبھی کبھی زندگی ایسی ٹھوکر مارتی ہے
کہ انسان سیدھا سجدے میں جا گرتا ہے

پوری زندگی انسان سجدے میں گزار دے پھر بھی ہم اللہ کے احسانوں کا قرض نہیں چُکا سکتے

کبھی کبھی زندگی ایسی ٹھوکر مارتی ہے

راہ خدا میں ٹھوکر کھانا سب کے بس کی بات نہیں
اپنے روٹھے رب کو منانا سب کے بس کی بات نہیں

گالی سن کر گالی دینا یہ تو ہے آسان بہت
گالی سنکر چپ رہ جانا سب کے بس کی بات نہیں

حافظ,قاری,عالم,عامی سب ہی سڑک پر چلتے ہیں
نامحرم سے آنکھ بچانا سب کے بس کی بات نہیں

سجدے کرنا آہیں بھرنا امت کے غم میں رونا
بے دینوں کو دین سکھانا سب کے بس کی بات نہیں

دین کے نام پر حلوہ روٹی سب کو ہے مرغوب مگر
دین کے خاطر پتھر کھانا سب کے بس کی بات نہیں

طالوت

Kabhi Kabhi Zindgi Esi Thokr Marti Hay
Keh Insan Sidha Sjday Mein Ja Girta Hay

اس پوسٹ پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں