1,070

جوانی میں مر گیا


تعویز لکھ کے دیتا تھا عمرطویل کے
عامل وہ خود بیچارہ جوانی میں مر گیا

تعویز لکھ کے دیتا تھا عمرطویل کے

Taweez Likh Kay Deta Tha Umar-e-Taweel kay
Aamil Wo Khud Be-chara Jawani Mein Mar Gaya


اس پوسٹ پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں