684

مقتل میں نہ مسجد نہ خرابات میں کوئی


مقتل میں، نہ مسجد، نہ خرابات میں کوئی
ہم کس کی امانت میں غمِ کارِ جہاں دیں

شاید کوئی ان میں سے کفن پھاڑ کے نکلے
اب جائیں، شہیدوں کے مزاروں پہ اذاں دیں

(فیض احمد فیض)

Maqtal Mein Na Masjid Mein Na Kharabaat Mein Koi
Hum Kis Ki Amanat Mein Gham-E-Kaar-E-Jahaan Den
Shayad Koi Un Mein Se Kafan Phaad Ke Nikle
Ab Jayen Shaheedoon Ke Mazaaroon Pe Azaan Den
Faiz Ahmad Faiz


اس پوسٹ پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں