1,919

میرے مالک نے میرے حق میں یہ احسان کیا


میرے مالک نے میرے حق میں یہ احسان کیا
خاکِ ناچیز تھا میں، سو مجھے انسان کیا

اللہ کا شکر ادا کریں کہ اللہ نے ہمیں اشرف المخلوقات بنایا ورنہ ہم تو صرف مٹی ہی تھے.

میرے مالک نے میرے حق میں یہ احسان کیا
خاکِ ناچیز تھا میں، سو مجھے انسان کیا

اس سرے دل کی خرابی ہوئی اے عشق دریغ
تُو نے کس خانۂ مطبوع کو ویران کیا

ضبط تھا جب تئیں، چاہت نہ ہوئی تھی ظاہر
اشک نے بہہ کے میرے چہرے پہ، طوفان کیا

تنہا شوق کی جو دل کی صبا سے پوچھی
اِک کفت خاک کوئی، اُن نے پریشان کیا

مجھ کو شاعر نہ کہو میرؔ کہ صاحب میں نے
درد و غم کتنے کئے جمع تو دیوان کیا

میر تقی میرؔ

Mere Maalik Ne Mere Haq Mein Ye Ahsaan Kia
Khake Na Cheez Tha So Mujhay Insaan Kia

Meer Taqi Meer


اس پوسٹ پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں